کوئٹہ میں ایف سی مدد گار سینٹر پر دہشتگردوں کا حملہ ناکام، 5 دہشت گرد ہلاک

سیکیورٹی فورسز نے کوئٹہ کے علاقے چمن ہاوسنگ اسکیم کے قریب فرنٹیئر کور (ایف سی) مدد گار سینٹر پر دہشت گردوں کا حملہ ناکام بناتے ہوئے پانچوں حملہ آوروں کو ہلاک کردیا۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کی جانب سے جاری بیان کے مطابق دہشت گردوں نے کوئٹہ میں ایف سی مددگار سینٹر پر حملے کی کوشش کی جسے سیکیورٹی فورسز نے ناکام بنادیا۔

آئی ایس پی آر کے مطابق بارود اور اسلحہ سے بھری گاڑی میں سوار 5 خود کش بمباروں نے ایف سی سینٹر پر داخل ہونے کی کوشش کی تاہم ایف سی کے چاک و چوبند اہلکاروں نے بروقت کارروائی کرتے ہوئے انہیں داخل ہونے سے روک دیا۔

پاک فوج کی جانب سے جاری بیان کے مطابق فورسز کی بروقت کارروائی میں تمام حملہ آور مارے گئے اور حملہ آور بظاہر افغان تھے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق دہشتگردوں کی یہ ناکام کارروائی گزشتہ روز کلی الماس کے علاقے میں اہم دہشت گردوں کی ہلاکت کا ردعمل تھا۔

پاک فوج کے مطابق ایف سی مددگار سینٹر پر اب صورتحال مکمل طور پر قابو میں ہے جبکہ دہشت گردوں کے ساتھ فائرنگ کے تبادلے میں ایف سی کے 4 جوان زخمی بھی ہوئے۔

اطلاعات کے مطابق افطار کے کچھ دیر بعد حملہ آوروں نے چمن ہاؤسنگ اسکیم کے قریب ایف سی مددگار سینٹر پر دھاوا بولا اور بارود سے بھری گاڑی سینٹر کے عقبی دروازے سے ٹکرادی۔

دھماکے کے نتیجے میں ایک خودکش بمبار ہلاک ہوگیا جبکہ اس کے دیگر 4 ساتھیوں نے پیدل سینٹر میں داخل ہونے کی کوشش کی تاہم ایف سی اہلکاروں نے بروقت کارروائی کرتے ہوئے انہیں ہلاک کردیا۔

دہشتگردوں اور سیکیورٹی فورسز کے درمیان فائرنگ کا تبادلہ تقریباً آدھے گھنٹے تک جاری رہا۔

اس دوران پولیس اور ایف سی نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا تھا جبکہ کچھ دیر بعد پاک فوج کے دستے بھی چمن ہاؤسنگ اسکیم پہنچ گئے تھے۔

وزیر داخلہ بلوچستان میر سرفراز بگٹی بھی واقعے کی اطلاع ملتے ہی ایف سی مدد گار سینٹر پہنچ گئے تھے۔

وزیر داخلہ بلوچستان نے اس بات کی تصدیق کی تھی کہ دہشت گردوں نے ایف سی کے مدد گار سینٹر پر حملہ کیا۔

وزیرداخلہ نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ ہم دہشت گردوں کا آخری دم تک مقابلہ کریں گے، ہمارے اہلکار آج دہشتگردوں کے خلاف شیروں کی طرح لڑے۔

شیئر کریں:

Facebook

Get the Facebook Likebox Slider Pro for WordPress