’’پدماوت‘‘کی تاریخ ایک بار پھر تبدیل

ممبئی: 

نامور بالی ووڈ اداکارہ دپیکا پڈوکون اور ہدایت کار سنجے لیلا بھنسالی کی فلم’’پدماوت‘‘کی ریلیز تاریخ ایک بار پھر تبدیل ہوگئی۔

بھارت کی متنازعہ ترین فلم ’’پدماوت‘‘کی مشکلات ختم ہونے میں ہی نہیں آرہی ہیں۔ دھمکیوں اور احتجاج کے بعد بڑی مشکل سے فلم کو بھارتی سنسر بورڈ کی جانب سے رواں ماہ 25 جنوری کو ریلیز کرنے کی اجازت ملی تھی جس پر فلم کے ہدایت کار سنجے لیلا بھنسالی نے سکون کا سانس لیا تھا تاہم اب اطلاعات ہیں کہ فلم کی ریلیز کی تاریخ ایک بار پھر تبدیل کردی گئی اب ’’پدماوت‘‘مقررہ تاریخ سے ایک دن پہلے یعنی 24 جنوری کو ریلیز کی جائے گی اس کے علاوہ فلمسازوں کی جانب سے فیصلہ کیا گیا ہے کہ فلم چند تجزیہ کاروں کو دکھائی جائے گی جو پیسے لے کر فلم پراپنا تجزیہ پیش کریں گے۔ بھارتی میڈیا کے مطابق یہ فیصلہ فلم کے حوالے سے ملک گیر احتجاج کے باعث کیا گیا ہے۔

بھارتی تجزیہ نگار اتول موہن کا کہنا ہے کہ اگر فلمساز پیسے دے کر لوگوں کو فلم دکھا رہے ہیں تو اس کا مطلبہے کہ وہ لوگ فلم کے حوالے سے بہت زیادہ پر اعتماد ہیں اور ثابت کرنا چاہتے ہیں کہ فلم کے خلاف ہونےوالا احتجاج بالکل غلط ہے اور لوگوں کو دکھانا چاہتے ہیں کہ فلم میں راجپوتوں کی ثقافت کو بالکل بھی مسخ نہیں کیا گیا۔

دوسری جانب بھارتی سنسر بورڈ کی جانب سے فلم کو ریلیز کیے جانے کا سرٹیفکیٹ ملنے کے باوجود فلم کے خلاف ہندوانتہا پسندوں کا احتجاج جاری ہے جب کہ بھارت کی چار ریاستوں راجستھان، گجرات، مدھیہ پردیش اورہریانہ میں فلم کی نمائش پر پابندی لگائی جا چکی ہے۔ ہدایت کار سنجے لیلا بھنسالی نےبھارتی سنسر بورڈ کی جانب سے ملنے والے سرٹیفکیٹ کے باوجود  فلم پر پابندی عائد کرنے والی چاروں ریاستوں کے خلاف سپریم کورٹ جانے کا فیصلہ کیا ہے۔

شیئر کریں:

احد چیمہ کی گرفتاری پر پنجاب حکومت اور نیب آمنے سامنے آگئے     |     23-02-2018     |     پی ایس ایل 3:،پشاور کا ملتان کو جیت کے لیے 152 رنز کا ہدف     |     شہباز شریف کو ن لیگ کا صدر بنانے کا حتمی فیصلہ     |     سپریم کورٹ کافیصلہ غیر متوقع نہیں،نواز شریف     |     مئیرکراچی وسیم اختر کانامناسب رویہ،محکمہ کے اہم افسران کی طویل چھٹیوں پر جانے کی دھمکی     |     (ن) لیگ سینیٹ الیکشن سے آؤٹ، الیکشن کمیشن نے امیدواروں کو آزاد قرار دیدیا     |     22-02-2018     |     کینیڈین وزیراعظم کی اہلیہ کی ایک تصویرپر بھارتی میڈیا تلملا اٹھا     |     ہمیں کسی سے محاذ آرائی نہیں کرنی، چیف جسٹس     |