پاکستان کی طرح کوئی قوم دہشت گردی کو شکست نہیں دے سکی، خواجہ آصف

وزیر خارجہ خواجہ آصف نے کہا ہے کہ جس عزم سے پاکستان نے دہشتگردی کو شکست دی ایسے کوئی بھی قوم دہشت گردی کو شکست نہیں دے سکی۔

اسلام آباد میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر خارجہ خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ پاکستان معاشی خود انحصاری کے راستے پر گامزن ہے اور معاشی خود انحصاری سے ہی ہمارا گھر درست ہو گا۔

خواجہ آصف نے کہا کہ معاشی خود انحصاری کے بغیر خود مختارخارجہ پالیسی کی تشکیل ناممکن ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں ٹیکس نیٹ بڑھایا گیا اور مزید بڑھ رہا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ دوست ممالک سے سفارتی تعلقات معاشی اور تجارتی تعلقات میں تبدیل کرنا چاہتے ہیں، امریکا کے ساتھ کچھ مسائل ضرور ہیں لیکن بات چیت چل رہی ہے۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ بچے، بوڑھے، اسکول، کالج، مساجد اور کھیل کے میدان دہشتگردی کا نشانہ بنے، کچھ سال پہلے پاکستان میں دہشت گردی کا بازار گرم تھا لیکن پاکستان نے اپنی کوشش اور قربانیوں سے دہشت گردی کو شکست دی۔

خواجہ آصف نے کہا کہ جس عزم سے پاکستان نے دہشتگردی کو شکست دی ایسے کوئی بھی قوم دہشت گردی کو شکست نہیں دے سکی۔ ان کا کہنا تھا کہ دنیا پاکستان کی کامیابی اور قربانیوں کو تسلیم کرے، امریکا کو بھی پاکستان کی پوزیشن کو سمجھنا چاہیے۔

خواجہ آصف نے کہا کہ امریکا افغانستان میں اپنی ناکامی کا ملبہ پاکستان پر ڈال رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان نے امریکا کے سامنے افغانستان میں بھارتی کردار پر تحفظات کا اظہار کیا تھا جس پر امریکا نے افغانستان میں بھارتی فوجی کردار نہ ہونے کی یقین دہانی کرائی ہے۔

انہوں نے کہا کہ دنیا پاکستان کے ساتھ تعلقات کو افغانستان میں ہونے والے واقعات کے تناظرمیں نہ دیکھے، ہم افغانستان کے امن کے سب سے بڑے خواہشمند اور اسٹیک ہولڈر ہیں، ہم تو بھارت میں بھی امن چاہتے ہیں۔

فاقی وزیر خارجہ نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کی روک تھام ضروری ہے، قابض افواج مقبوضہ کشمیر میں جو کر رہی ہیں اس کی مذمت کی جانی چاہیے۔

شیئر کریں: