تیس سال سے باریاں لگانے والوں نے کراچی کو کچھ نہیں دیا،عمران خان

کراچی : پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران‌ خان کا کہنا ہے کہ تیس سال سے باریاں لگانے والوں نے کراچی کو کچھ نہیں دیا، میری جدوجہد رنگ لارہی ہے، تبدیلی کی ہوا چل پڑی ہے، میرا نیا پاکستان کا خواب کراچی کے بغیر ممکن نہیں۔

تفصیلات کے مطابق پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان کا کراچی میں پڑاؤ کا دوسرا دن ہے،انھوں نے دن کا آغاز تاجر رہنما عبدالرحیم جانو کی رہائش گاہ پر ناشتے سے کیا، عمران خان کی قیمہ والے نان، نہاری،حلوہ پوری اور لسی سے تواضع کی گئی۔

معروف صنعت کار یحیٰ پولانی کی تحریک انصاف میں شمولیت
اس موقع پر عبدالرحیم جانو اور معروف صنعت کار یحیٰ پولانی نے تحریک انصاف میں شمولیت اختیار کرلی۔

عمران خان نے گفتگو میں کہا کہ ہمیشہ مقابلے میں اپنے مخالف کوکمزور نہیں سمجھناچاہیے، طویل عرصے سے پاکستان کیلئے جدوجہد کررہا ہوں، میری جدوجہد رنگ لارہی ہے، تبدیلی کی ہوا چل پڑی ہے۔

سربراہ تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ میچ کے دوران بھی مخالف کو کمزور نہیں سمجھتا تھا، لیگ والے کہتے ہیں آپ توامپائرکی انگلیوں کی بات کرتے ہیں، لاہور میں جو ہوا ہے، وہ سب عوام کے سامنے آگیا ہے۔

انھوں نے کہا کہ جب اللہ کی پکڑ ہوتی ہے تو آپ کچھ بھی کرلیں پکڑے جاتے ہیں، پانامالیکس اللہ کی طرف سے پکڑ تھی، پانامالیکس ہم نہیں لے کر آئے تھے، اللہ کی طرف سے پکڑ ہوئی تھی۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ لاہور پر اربوں روپے لگائے ، جب بارش ہوئی تو پول کھل گیا، لاہور کی بارش بھی اللہ کی پکڑ ہے،عوام نے سب دیکھ لیا، الیکشن میں بھی ان لوگوں کو پتہ چل جائے گا حقیقت کیا ہے۔

پی ٹی آئی چیئرمین نے کہا کہ پاکستان کو کرپشن سے نجات دلانا تھی، عوام تبدیلی چاہتے ہیں، دو پارٹیاں ہیں، جن کی باریاں چل رہی ہیں،عوام تنگ آچکے تھے، قرضے بڑھتے جارہے ہیں، ملک کے اداروں کو تباہ کردیا گیا، پانی کا مسئلہ پیدا ہوگیا ہے، ڈیمز پر کوئی توجہ نہیں دی گئیں۔

ان کا کہنا تھا کہ باریاں لے کر ملک کو تباہ کردیا گیا، ان کے بچے بیرون ملک رہتے ہیں، 600 کروڑ کے گھر میں ان کے بچے رہتے ہیں، ملک کو تباہ کر دیا گیا، جب ان سے منی ٹریل کو پوچھوتو کہتے ہیں عوام فیصلہ کریں گے۔

تحریک انصاف کے سربراہ نے کہا کہ کراچی سے الیکشن کا فیصلہ اس لیے کیا کیونکہ کراچی اٹھے گا تو پاکستان بڑھے گا، کراچی نہیں اٹھے گا تو پاکستان ترقی نہیں کرسکتا، میرا نیا پاکستان کا خواب کراچی کے بغیر ممکن نہیں، کراچی کو ٹھیک کریں گے تو میرا نیا پاکستان کا خواب پورا ہوگا۔

ان کا کہنا تھا کہ کے پی میں ہماری حکومت رہی لیکن کراچی پر خصوصی توجہ دے رہا ہوں، شوکت خانم اسپتال کیلئے کراچی ہی نہیں دنیا بھر میں میمن کمیونٹی نے اسپتال کیلئے بھرپور مدد کی۔

عمران خان نے کہا جو لوگ 30سال سے باریاں لے رہے ہیں، کراچی کے مسائل کا حل نہیں، ان لوگوں کے پاس مسائل کا حل ہوتا تو کراچی نیچے نہیں جارہا ہوتا، کے پی میں ہماری پہلی مرتبہ حکومت آئی، کوئی بھی سروے اٹھا کر دیکھ لیں، ان لوگوں نے 6 ،6 باریاں لے لیں آج تک پولیس کو ٹھیک نہیں کر سکے۔

چیئرمین پی ٹی آئی کا کہنا تھا کہ یہ پولیس کوکیوں ٹھیک نہیں کرسکے، فوج کا کام پولیسنگ نہیں ہوتا، شہبازشریف پنجاب پولیس کے ذریعے لوگوں کو قتل کراتے رہے ہیں، ماڈل ٹاؤن میں بھی پولیس کے ذریعے قتل کرائے گئے،غلط استعمال کیا گیا، راؤ انوار بھی سب کے سامنے ہے، کے پی پولیس کیخلاف ایک کیس بتا دیں۔

انھوں نے کہا کہ کے پی میں سیاسی مخالف پرایک کیس بھی درج نہیں ہے، پنجاب میں میرے خلاف 32 کیسز سیاسی بنیادوں پردرج کیےگئے، کے پی پولیس بہتر ہے، وہاں کے اسپتال سب سے بہتر ہیں، خیبرپختونخوا میں ایک ارب درخت لگائے، گلوبل وارمنگ سے آگاہ کیا گیا۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ کراچی سے متعلق ہمارے پاس بہترین پروگرام ہے، کراچی کے کوڑے کرکٹ سے ہی بجلی بنائیں گے اور شہرکو دیں گے، کراچی کو ایک میٹروپولیٹن سٹی کی طرح چلانا ہے، مینجمنٹ بہتر کرنا ہوگی،عمران خان

سربراہ پی ٹی آئی نے کہا کہ طویل اندھیری رات ختم ہونےجارہی ہے، بڑی تعداد میں لوگ آرہے ہیں، یہ تبدیلی آگئی ہے، لاہورکے پیرس بننے کی اصلیت سامنے آگئی ہے، اللہ کی پکڑہوتی ہے تو پاناما جیسے کیس نکل آتے ہیں، شہبازشریف کی ترقی صرف اشتہاروں تک تھی۔

ان کا کہنا تھا کہ تیس سال تک باریاں لینے والوں کے پاس کراچی کا کوئی حل نہیں، کئی کئی سال تک باریاں لینے والے پولیس کوکیوں ٹھیک نہیں کرسکے، کے پی کے میں ہمیں پہلی بارحکومت ملی،پولیس کوٹھیک کردیا، شہبازشریف اسی پولیس سے ماورائے عدالت قتل کراتا ہے، راؤانوار نے 420سے زائد لوگوں کو قتل کیا، غلط کام کرائیں گے تو پولیس تباہ ہوگی۔

عمران خان نے کہا کہ تاریخ ہے جوجماعتیں ادارےتباہ کرتی ہیں وہ انہیں کبھی ٹھیک نہیں کرسکتیں، پانی کابحران اوربجلی کی لوڈشیڈنگ کراچی کے بڑے مسائل ہیں، دو جماعتیں بار بار اقتدار میں آئیں، بتائیں انہوں نے ایک بھی چیز ٹھیک کی ہو۔

پی ٹی آئی چیئرمین کا کہنا تھا کہ پاکستان تحریک انصاف اقتدار میں آکرمسائل حل کرےگی، قوم تبدیلی کیلئے تیار ہے، اقتدار میں آئے تو تبدیلی نظربھی آئے گی، جس کو روشنیوں کا شہر کہا جاتا تھا، آج یہاں گندگی کے ڈھیر لگےہیں، پی ٹی آئی اقتدار میں آئی تو کراچی کو دوبارہ روشنیوں کا شہر بنائیں گے۔

شیئر کریں:

Facebook

Get the Facebook Likebox Slider Pro for WordPress