بلند آواز یادداشت بڑھانے کے لیے مؤثر ترین

سائنسدانوں کے نئے انکشاف کے مطابق معلومات کو ذہن نشین کرنے لیے انہیں بلند آواز سے پڑھنامؤثر ترین عمل ہے ۔

برطانوی اخبار’’ ڈیلی میل ‘‘ کے مطابق اونٹاریو میں یونیورسٹی آف واٹر لو میں کی جانے والی ایک ریسرچ میں یہ انکشاف کیا گیا ہے کہ کسی بھی طرح کی معلومات کو یادداشت میں محفوظ رکھنے کےلیے انہیں بلند آواز سے پڑھنا، کسی سےکوئی بات کہلوانے یا سننے سے زیادہ بہتر ہے۔

اس تحقیق میں 95افراد کا جائزہ لیا گیا جس میں بنا آواز کے مطالعہ کرنے ، باآواز مطالعہ کرنے اور کسی دوسرے شخص سے پڑھوانے کے بعد انہیں یاد رکھنےکی صلاحیتوں کو پرکھاگیا۔ تحقیق کے نتائج سے یہ اخذ کیا گیا کہ بلند آواز کسی بھی چیز کو یادرکھنے میں مددگار ثابت ہوتی ہے۔

اس تحقیق میں یہ بھی بتایا گیا ہے کہ بلند آواز سےبولنا اور سننا الفاظ کو مزید ذاتی نوعیت کا بناتا ہے جسکے باعث الفاظ یاد رہنے کے امکانات مزید بڑھ جاتے ہیں۔

اسی طرز کی گذشتہ تحقیقات کے مطابق الفاظ کو لکھنا یا انہیں ٹائپ کرنا یاددہانی کے عمل کو آسان بنادیتا ہے۔ جبکہ ایک اور تحقیق کے مطابق متحرک رہنا بھی یادداشت بڑھانے کے لیے بہترین عمل ہے۔

گذشتہ تحقیق میں کہا گیا تھا کہ الفاظ کو لکھنے یا ٹائپ کرنے سے انہیں یاد کرنا آسان ہوتا ہے، جبکہ ایک اور تحقیق کے مطابق ورزش اور متحرک رہنا بھی یادداشت کے لیے بہترین ہے۔

شیئر کریں: